Fri 18 Jm2 1435 - 18 April 2014
11784

قضاءکی نیت سےنفلی روزے رکھنےکاحکم

اگرمسلمان عورت جمعرات اورسوموارکاروزہ عادتارکھتی ہوتوکیااس کےلئےیہ جائز ہےکہ وہ اس فرصت سےفائدہ اٹھاکررمضان کےفوت شدہ روزے انہیں دنوں میں رکھ لےیاکہ یہ واجب ہےکہ ان کی نیت علیحدہ ہو ؟

الحمدللہ

رمضان کےفوت شدہ روزوں کی قضاءمیں جمعرات اورسوموارکےروزے رکھنےمیں کوئی حرج نہیں لیکن شرط یہ ہےکہ اس میں نیت قضاءکی ہونی چاہیے ۔

ہوسکتاہےکہ وہ ڈبل اجرحاصل کرسکےقضاءاورنفلی روزے کااجرکیونکہ اللہ تعالی کافضل بہت وسیع ہے ۔

اورفرض کریں اگروہ قضاءکےعلاوہ کچھ نہیں پاتی توبیشک قضاءنفل سےبہتر اور افضل ہےلیکن اگراس نےنفلی روزے کی نیت کی اورقضاءکی نیت نہیں کرتی تواس سے فرض ساقط نہیں ہوگااس لئےاسےچاہئےکہ وہ رمضان میں چھوڑے ہوئےروزے رکھے ۔

واللہ تعالی اعلم ۔

اللہ تعالی ہمارے نبی محمدصلی اللہ علیہ وسلم پراوران کی آل اورصحابہ پررحمتیں نازل فرمائے آمین ۔ .

دیکھیں کتاب : فتاوی اسلامیۃ جلدنمبر ۔(2) صفحہ نمبر۔(249 ۔250) ۔ ، اورفتاوی اللجنۃ الدائمۃ ۔(10 / 383)
Create Comments