Sat 19 Jm2 1435 - 19 April 2014
1188

عورت كے ختنے كرنے كا حكم

كيا عورت كے ختنے كرنا سنت ہے، يا كہ برى عادت، ميں نے ايك ميگزين ميں پڑھا تھا كہ كسى بھى شكل ميں عورت كے ختنہ كرنا برى عادت ہے، اور طبى اعتبار سے مضر اور نقصان دہ ہے، اور بعض اوقات تو بانجھ پن پيدا كر ديتا ہے، كيا يہ بات صحيح ہے ؟

الحمد للہ:

ابن آدمى كى بيٹيوں كا ختنہ كرنا سنت ہے، نہ كہ برى عادت، اور اگر يہ اعتدال سے كيا جائے تو نقصان دہ اور مضر نہيں ہے، ليكن اگر اس ميں غلو سے كام ليتے ہوئے زيادہ كر ديا جائے تو اس سے نقصان اور ضرر پيدا ہو سكتا ہے.

ديكھيں: فتاوى اللجنۃ الدائمۃ للبحوث العلميۃ والافتاء ( 5 / 120 ).
Create Comments