37706: رمضان میں خوشبولگانا


کیا رمضان المبارک میں خوشبولگانا مشروع ہے ؟

الحمد للہ
رمضان المبارک میں خوشبواستعمال کرنا جائز ہے ، اوراس کے استعمال سے روزہ فاسد نہيں ہوتا ۔

فتاوی اللجنۃ الدائمۃ میں ہے کہ :

( مطلقاخوشبو وہ عطر ہو یا دوسری روزے کو فاسد نہیں کرتیں رمضان ہویا غیر رمضان روزہ نفلی ہو یا فرضی اس پر کچھ اثرنہیں ہوتا ) ا ھـ

اورایک دوسرے فتوی میں لجنۃ کا کہنا ہے :

( جس نے کسی بھی قسم کی خوشبوروزے کی حالت میں استعمال کی اس کا روزہ فاسد نہیں ہوگا ، لیکن اسے دھونی خوشبوکا پاوڈر نہيں سونگنا چاہیے مثلا کستوری پاوڈر ) ا ھـ

دیکھیں اللجنۃ الدائمۃ ( 10 / 271 ) ۔

اورشیخ ابن عثیمین رحمہ اللہ تعالی کہتے ہیں :

روزے دار کے لیے دن کے شروع اورآخر میں خوشبو استعمال کرنی جائز ہے چاہے وہ دھونی ہو یا تیل کی شکل وغیرہ میں ، لیکن دھونی سونگنا جائز نہيں کیونکہ اس کے محسوس اورمشاھد اجزاء ہیں جن کے سونگنے سے وہ معدہ میں داخل ہوتےہیں ، اوراسی لیے نبی مکرم صلی اللہ علیہ وسلم نے لقیط بن صبرہ رضي اللہ تعالی عنہ کو فرمایا تھا :

( ناک میں پانی ڈالنے میں مبالغہ کیا کرو لیکن روزے کی حالت میں مبالغہ نہ کرو ) ا ھـ

دیکھیں : فتاوی ارکان الاسلام صفحہ ( 469 ) ۔

واللہ اعلم .

الاسلام سوال وجواب
Create Comments