Fri 25 Jm2 1435 - 25 April 2014
37968

کفارہ قسم کی نیت سے روزہ افطارکروانا

کیا قسم کے کفارہ کی نیت سے روزہ افطار کروانا جائز ہے ؟

الحمد للہ :

جی ہاں ایسا کرنا جائز ہے لیکن اس میں ایک شرط ہے کہ روزہ دارمسکین ہونا چاہیۓ کیونکہ اللہ تعالی نے قسم کےکفارہ میں فرمایا ہے :

{ اللہ تعالی تہماری لغو قسموں پر تم سے مؤاخذہ نہیں فرماتا لیکن مؤاخذہ اس پر فرماتا ہے کہ تم جن قسموں کو مضبوط کرلو اس کا کفارہ دس محتاجوں کو اوسط درجہ کا کھانا دینا ہے جو تم اپنے گھروالوں کو کھلاتے ہو یا ان کو کپڑے دینا ہے یا ایک غلام آزاد کرنا ہے } المائدۃ ( 89 ) ۔

لھذا قسم کے کفارہ میں کھانے کے لیے مسکین ہونا شرط ہے ۔

اوراس پر متنبہ رہنے چاہیے کہ قسم کے کفارہ میں دس مسکینوں کو کھانا کھلانا ہے جیسا کہ مندرجہ بالاآیت میں موجود ہے لھذا ایک ہی مسکین کو دس بار کھلانا صحیح نہيں ۔

دیکھیں المغنی لابن قدامۃ المقدسی ( 13 / 513 ) ۔

واللہ اعلم .

الاسلام سوال وجواب
Create Comments