ar

112139: سوموار اور جمعرات كا اكٹھا روزے نہ ركھ سكے تو كيا صرف سوموار كا روزہ ركھ ليا جائے ؟


ميں كچھ مخصوص اسباب كى بنا پر جمعرات كا روزہ نہيں ركھ سكتا، تو كيا صرف ہر ہفتہ ميں سوموار كا روزہ ركھنا ہى كافى ہو گا يا كہ سوموار اور جمعرات دونوں روزے ركھنا ضرورى ہيں ؟

Published Date: 2010-11-21

الحمد للہ:

ہفتہ ميں دو مذكورہ يوم كے روزوں ميں سے ايك روزہ ركھنے ميں كوئى حرج نہيں، ان ايام كے روزے ركھنا سنت ہے واجب نہيں، اس ليے جو سوموار اور جمعرات دونوں روزے ركھتا ہے تو اس نے خير عظيم والا عمل كيا، اور دونوں كو جمع كرنا اور دونوں روزے ركھنا واجب نہيں.

بلكہ ہفتہ ميں دونوں روزے ركھنا مستحب ہيں، اس ليے كہ صحيح احاديث ميں نبى كريم صلى اللہ عليہ وسلم سے يہ دونوں روزے ركھنا ثابت ہيں "

اللہ سبحانہ و تعالى ہى توفيق نصيب كرنے والا ہے " انتہى .

مجموع فتاوى الشيخ ابن باز ( 15 / 386 ).
Create Comments