72199: دو شخص مسجد ميں نماز كے ليے داخل ہوئے ليكن پہلى صف ميں صرف ايك شخص كے ليے جگہ تھى


دو شخص مسجد ميں داخل ہوئے اور پہلى صف ميں صرف ايك شخص كو جگہ ملى تو كيا ان كے ليے افضل يہ ہے كہ وہ دونوں دوسرى صف ميں كھڑے ہوں، يا كہ ايك شخص پہلى صف ميں اور دوسرا اكيلا ہى پچھلى صف ميں كھڑا ہو جائے ؟

Published Date: 2007-04-09

الحمد للہ:

" اگر دو افراد مسجد ميں داخل ہوں اور پہلى يا دوسرى صف ميں صرف ايك شخص كے جگہ ہو تو وہ دونوں اكٹھے صف بنا كر كھڑے ہوں، كيونكہ اگر ايك شخص صف ميں كھڑا ہو گا تو دوسرا اكيلا رہ جائيگا، تو اس حالت ميں افضل اور بہتر يہ ہے كہ وہ دونوں صف كے پيچھے دوسرى صف بنا كر كھڑے ہو جائيں.

ليكن اگر دو افراد كے ليے اگلى صف ميں جگہ ہو تو پھر دونوں اس صف ميں كھڑے ہو جائيں، اور اكيلے پچھلى صف ميں كھڑے نہ ہوں، كيونكہ ايسا كرنا خلاف سنت ہے.

كيونكہ نبى كريم صلى اللہ عليہ وسلم نے پہلى پہلى صفوں كو مكمل كرنے پر ابھارا ہے، ليكن اگر فرض كريں كہ انہوں نے ايسا كر ليا تو ان كى نماز صحيح ہے، كيونكہ ايك شخص دوسرے سے عليحدہ نہيں ہوا " انتہى .

فضيلۃ الشيخ ابن عثيمين رحمہ اللہ.
ديكھيں: مجموع فتاوى ابن عثيمين ( 15 / 207 ).
Create Comments