Thu 24 Jm2 1435 - 24 April 2014
5284

کیاعا‏ئشہ رضي اللہ تعالی عنہا نے کہا تھا کہ انہیں رات کودفن کیا جاۓ

میں پڑھا ہے کہ عائشہ رضي اللہ تعالی عنہانے یہ مطالبہ کیا تھا کہ انہيں رات کودفن کیا جاۓ ، اگر یہ بات صحیح ہے تواس کا سبب کیا تھا ؟

الحمد للہ
محمد بن عمر واقدی نے اس کا ذکرکیا ہے اوراسی طرح امام حاکم رحمہ اللہ تعالی نے بھی مستدرک ( 4 /6-7 ) اور ابن سعد رحمہ اللہ تعالی نے طبقات ابن سعد ( 8/76-77 )میں اورامام ذھبی رحمہ اللہ تعالی نے سیر اعلام النبلاء ( 2/162 ) میں اس کے علاوہ دوسرے مصادر میں بھی مذکورہے ۔

واللہ اعلم ظاہر تویہی ہوتا کہ یا تواس لیے تھا دفن میں دیرنہ ہو اس لیے کہ ان کی وفات ستائيس رمضال کی شب وتروں کے بعد ہوئ تھی ، یاپھر اس میں ان کے لیے زيادہ پردہ اورستر تھا ، یاپھر ان کے دوراور خاص کرزندگی کے آخری ایام ميں رات کودفن کرناغلط شمار ہونے لگا تھا توانہوں نے اس فعل سے حکم بیان کرنا چاہا ، یا کوئ اوروجہ ہوگي ، عمومی طورپر رات کو ضرورت کے پیش نظردفن کیا جاسکتا ہے ۔

واللہ تعالی اعلم .

الشیخ محمد صالح المنجد
Create Comments