منگل 22 شوال 1440 - 25 جون 2019
اردو

پيشانى كے اوپر سے بال كاٹنا

13248

تاریخ اشاعت : 28-07-2008

مشاہدات : 4394

سوال

بعض عورتيں پيشانى كے اوپر سے كچھ بال كاٹنى ہيں، اور كچھ كونيچے لٹكتے رہنے ديتى ہيں، اس كا حكم كيا ہے ؟

جواب کا متن

الحمد للہ:

اگر تو اس سے مراد كافر اور ملحد قسم كى عورتوں سے مشابہت ہو تو يہ حرام ہے؛ كيونكہ غير مسلم سے مشابہت حرام ہے اس ليے كہ رسول كريم صلى اللہ عليہ وسلم كا فرمان ہے:

" جس نے بھى كسى قوم سے مشابہت اختيار كى تو وہ انہى ميں سے ہے "

ليكن اگر اس سے مقصد مشابہت نہ ہو بلكہ يہ عورتوں كے مابين ايك نئى عادت ہو، اور اگر اسے زينت شمار كيا جاتا ہو جس سے عورت اپنے خاوند كے ليے زينت اختيار كرتى ہے، اور اپنے جيسى اور اپنى ہم جولي اور سہيلى عورتوں كے مابين ايسے مظہر اور شكل ميں آتى ہو كہ جو اس كى قدر و منزلت ميں عورتوں كے ہاں اضافہ كرے تو ہميں اسميں كوئى حرج نظر نہيں آتا.

ماخذ: ديكھيں: فتاوى اللجنۃ الدائمۃ للبحوث العلميۃ والافتاء ( 3 / 881)

تاثرات بھیجیں