بدھ 18 جمادی اولی 1440 - 23 جنوری 2019
اردو

جينز كا لباس پہننا

14310

تاریخ اشاعت : 24-06-2008

مشاہدات : 3576

سوال

اگر مسلمان عورت كے ليے جينز كا مناسب طريقہ سے لباس بنايا جائے تو كيا پھر بھى اسے پہننا حرام ہو گا، اور اس ميں كفار سے مشابہت ہو گى ؟

جواب کا متن

الحمد للہ:

مشابہت كا معنى اور مفہوم يہ ہے كہ: كوئى شخص ايسا كام كرے جو ان كفار كے ساتھ مخصوص ہو، اس ليے اگر يہ كپڑا يعنى جينز وغيرہ كا لباس ايسے طريقہ سے سلائى كيا جائے جو كفار كے لباس سے مشابہ ہو تو پھر يہ مشابہت ميں داخل ہو گا.

ليكن صرف يہ كہ كفار اس كپڑے كا لباس سلائى كروا كر پہنتے ہيں، اس ليے اگر اس كپڑے كا لباس شرعى طريقہ كے مطابق ہو اور اس كى شكل و ہيئت كفار كے لباس سے مختلف ہو تو اس ميں كوئى حرج نہيں، چاہے كفار اس كپڑے سے مشہور ہى كيوں نہ ہوں، جب يہ لباس كفار كے لباس كى ہيئت پر نہيں ہے تو اس ميں كوئى حرج نہيں " اھـ

فضيلۃ الشيخ ابن عثيمين رحمہ اللہ .

ماخذ: ديكھيں: مجموعۃ اسئلۃ تھم المراۃ المسلمۃ صفحہ ( 16 )

تاثرات بھیجیں