اتوار 19 ذو الحجہ 1441 - 9 اگست 2020
اردو

براہِ راست ویڈیو کال کرتے ہوئے پردہ کرنے کا حکم

212421

تاریخ اشاعت : 14-10-2014

مشاہدات : 2470

سوال

مجھے کچھ دن پہلے ہی علم ہوا ہے کہ کچھ عالمی ادارے ٹیلی فون اور انٹر نیٹ کے ذریعے کی جانیوالی کالز کی جاسوسی کرتے ہیں۔
تو کیا مسلم خواتین چہرہ ڈھانپنے کیلئے ویڈیو کال کے دوران شرعی پردے کا اہتمام کریں؟ یہ بات ذہن نشین رہے کہ گھر والوں کو دیکھنے کیلئے ویڈیو کال کرنے کا فائدہ بہت ہوتا ہے۔

جواب کا متن

الحمد للہ.

الحمد للہ:

آڈیو/ویڈیو کال کرنے کیلئے پر امن سوفٹ ویئرز کا استعمال کرتے ہوئے پردہ کرنا ضروری نہیں ہے، بشرطیکہ دوسری طرف کوئی اجنبی نہ ہو، لیکن یہ ضروری ہے کہ کال کی سہولت دینے والا سوفٹ ویئر پر امن ہو، اس کے بارے میں آپ متعلقہ افراد سے معلومات لے سکتے ہیں۔

لیکن اگر گفتگو کے دوران خواتین اپنی تصویر غیر اجانب کو بھی نہ دیکھائیں ، اور کیمروں والے آلات سے دور رہیں، یا پھر کیمرے پر اسٹیکر لگا دیں تا کہ انکی لا علمی میں بھی انکی تصاویر منتقل نہ ہوں، تو یہ محتاط اور افضل ہوگا۔

واللہ اعلم .

ماخذ: الاسلام سوال و جواب