منگل 13 رجب 1440 - 19 مارچ 2019
اردو

سجدہ تلاوت كے ليے كھڑا ہونے كا حكم

4950

تاریخ اشاعت : 11-10-2006

مشاہدات : 4122

سوال

جب كوئى شخص مسجد ميں قرآن مجيد كى تلاوت كر رہا ہو يا كوئى دوسرا تلاوت كر رہا ہو اور سجدہ تلاوت كى آيت پر پہنچے تو كيا اس كے ليے كھڑا ہو كر سجدہ تلاوت كرنا افضل ہے، يا كہ وہ اپنى جگہ بيٹھے ہى سجدہ كر لے دونوں ميں سے افضل كيا ہے ؟

جواب کا متن

الحمد للہ:

سجدہ تلاوت كى بنا پر كھڑا ہونے كى مشروعيت پر ہميں تو كوئى دليل معلوم نہيں.

اللہ تعالى ہى توفيق دينے والا ہے، اللہ تعالى ہمارے نبى محمد صلى اللہ عليہ وسلم اور ان كى آل اور صحابہ كرام پر اپنى رحمتيں نازل فرمائے .

ماخذ: ديكھيں: فتاوى اللجنۃ الدائمۃ للبحوث العلميۃ والافتاء ( 7 / 265 )

تاثرات بھیجیں