منگل 13 رجب 1440 - 19 مارچ 2019
اردو

ایسے بنک سے قرضہ لیناجو کمپنی سے سودی کاروبارنہيں کرتا

7309

تاریخ اشاعت : 19-12-2003

مشاہدات : 3103

سوال

ایک کمپنی کا کسی بنک کے ساتھ کاروبار ہو اوروہ بنک اس کمپنی کے ملازمین کوکچھ معین رقم بغیر کسی سود کے قرض دے اوراس کے بدلے میں تنخواہ سے ماہانہ کٹوتی کروانے کا مطالبہ کرے توکیا ملازم کے لیے اس بنک سے قرضہ حاصل کرنا جائز ہوگا ؟

جواب کا متن

الحمد للہ
ہم نے مندرجہ بالا سوال فضیلۃ الشیخ محمد بن صالح عثیمین رحمہ اللہ تعالی کےسامنے پیش کیا تو ان کاجواب تھا :

جب قرض سود کے بغیر ہے توملازم کےلیےاس بنک سے قرض حاصل کرنے میں کوئي مانع نہيں ۔

واللہ اعلم .

ماخذ: الشيخ محمد بن صالح العثيمين

تاثرات بھیجیں