منگل 22 شوال 1440 - 25 جون 2019
اردو

كچھ مدت قبل بچے كے عقيقہ ميں ايك بكرا ذبح كيا

85392

تاریخ اشاعت : 04-06-2008

مشاہدات : 3767

سوال

الحمد للہ ميرے ہاں چھ برس قبل بچے كى پيدائش ہوئى تو ميں نے عقيقہ ميں ايك بكرا ذبح كيا تو كيا عقيقہ پورا كرنے كے ليے اب ميں دوسرا بكرا ذبح كر سكتا ہوں، يا كہ دوبارہ دو ہى ذبح كرنا ہونگے ؟

جواب کا متن

الحمد للہ:

عقيقہ سنت مؤكدہ ہے، اور ترك كرنے والے گناہ نہيں، كيونكہ سنن ابو داود ميں عمرو بن شعيب عن ابيہ عن جدہ سے مروى ہے كہ رسول كريم صلى اللہ عليہ وسلم نے فرمايا:

" جس كا بچہ پيدا ہو اور وہ اس كى جانب سے جانور ذبح كرنا پسند كرے تو ذبح كرے، بچے كى جانب سے دو كفائت كرنے والے بكرے، اور بچى كى جانب سے ايك بكرا "

سنن ابو داود حديث نمبر ( 2842 ) علامہ البانى رحمہ اللہ نے اسے صحيح ابو داود ميں حسن قرار ديا ہے.

اور جب آپ اس سنت پر عمل كرنا چاہتے ہيں تو پھر اب ايك اور بكرا ذبح كر ليں تا كہ چند برس قبل عقيقہ كى تكميل ہو سكے.

مزيد آپ سوال نمبر ( 38197 ) اور ( 20018 ) كے جوابات كا مطالعہ بھى كريں.

واللہ اعلم .

ماخذ: الاسلام سوال و جواب

تاثرات بھیجیں