جمعہ 14 شعبان 1440 - 19 اپریل 2019
اردو

نماز عيد ميں تكبيروں كے دوران امام كے ساتھ ملنا

سوال

اگر ميں نماز عيد ميں نماز عيد كى تكبيروں كے بعد امام كے ساتھ شامل ہوں تو كيا مجھے تكبير تحريمہ كے بعد فوت شدہ تكبيريں كہنا ہونگى ؟

جواب کا متن

الحمد للہ:

شيخ ابن عثيمين رحمہ اللہ تعالى سے مندرجہ ذيل سوال كيا گيا:

اگر ميں امام كے ساتھ نماز عيد كى زائد تكبيروں ميں ملوں تو كيا حكم ہے، آيا ميں فوت شدہ تكبيروں كى قضا كرونگا؟

شيخ رحمہ اللہ تعالى كا جواب تھا:

" اگر آپ دوران تكبيرات امام كے ساتھ مليں، تو آپ پہلے تكبير تحريمہ كہيں، اور پھر باقى مانندہ تكبيروں ميں امام كى اتباع كريں، اور جو تكبيريں رہ گئى ہيں وہ آپ سے ساقط ہيں " اھـ .

ماخذ: ديكھيں: مجموع فتاوى ابن عثيمين ( 16 / 245 )

تاثرات بھیجیں