سوموار 9 شوال 1441 - 1 جون 2020
اردو

ایک مریض کو تسلسل کے ساتھ دوا چاہیے تو وہ روزوں کا کیا کرے؟

106455

تاریخ اشاعت : 30-04-2020

مشاہدات : 256

سوال

ایک شخص کو عارضہ قلب لاحق ہے، اور اسے تسلسل کے ساتھ دوا چاہیے، تقریبا ہر آٹھ یا چھ گھنٹے کے بعد اس پر دوا کھانا لازم ہے، تو کیا اس سے روزہ ساقط ہو جائے گا؟

جواب کا متن

الحمد للہ:

"جی ہاں اس سے روزہ ساقط ہو جائے گا، اور وہ ہر دن کے بدلے میں ایک مسکین کو کھانا کھلائے گا، چنانچہ اگر چاہے تو وہ ہر مسکین کو ایک صاع کا چوتھائی حصہ چاول دے دے، اور اگر اس کے ساتھ گوشت بھی شامل کر لے تو یہ اچھا ہو گا، اور اگر چاہے تو پھر رمضان کی آخری رات میں اتنے ہی مساکین کو رات کا کھانا کھلا دے، یا پھر رمضان کے بعد کسی بھی دن میں انہیں دوپہر کا کھانا کھلا دے، یہ سب صورتیں جائز ہیں۔" ختم شد
"مجموع فتاوى ابن عثیمین" روزوں سے متعلقہ فتاوی(126) ۔

واللہ اعلم

ماخذ: الاسلام سوال و جواب

تاثرات بھیجیں