سوموار 20 ذو الحجہ 1441 - 10 اگست 2020
اردو

میڈیکل چیک اپ کے بعد خاتون کے مخصوص حصے سے کچھ خارج ہوا۔

11780

تاریخ اشاعت : 22-04-2020

مشاہدات : 331

سوال

خواتین کے امراض سے متعلقہ "مسحہ" نامی یا کسی بھی طبی معائنے کے بعد اگر جسم سے کچھ خارج ہو جائے تو کیا عورت پر غسل کرنا لازمی ہو گا؟

جواب کا متن

الحمد للہ.

الحمد للہ

سوال میں مذکور مسحہ نامی طبی معائنہ واضح نہیں ہے، تاہم اگر اس سے مراد ایسے میڈیکل چیک اپ ہیں جن میں علاج شرمگاہ کے راستے سے کرنا پڑتا ہے، مثلاً کہ رحم وغیرہ کا علاج تو پھر ایسے چیک اپ کے دوران رحم سے یا اندام نہانی سے خون یا کچھ اور سائل مادہ نکل آئے تو پھر [اگر نماز ادا کرنی ہو تو ] وضو کر لے، اور اگر یہ بات شواہد کی بنا پر واضح ہو کہ نکلنے والا خون حیض کا خون ہے مثلاً کہ وہ وقت ہی حیض کے آنے کا ہو تو پھر اس عورت پر حیض کا غسل واجب ہو گا۔

واللہ اعلم

ماخذ: الشیخ سعد الحمید