جمعہ 16 رجب 1440 - 22 مارچ 2019
اردو

جس كے دين پر كوئى حرج نہ ہوتا ہو كيا اس پر بھى ہجرت واجب ہے

3021

تاریخ اشاعت : 18-06-2008

مشاہدات : 5188

سوال

اگر انسان اپنے ملك ميں اپنے دين اور اپنے آپ كا خطرہ محسوس كرے اور پر امن نہ ہو تو كيا اس حالت ميں مسلمان پر ہجرت فرض ہو گى، اور وہ كہاں ہجرت كرے ؟

جواب کا متن

الحمد للہ:

اگر تو واقعتا ايسا ہى ہے جيسا كہ ذكر كيا گيا ہے كہ مسلمان شخص اپنے دين اور اپنے نفس كو اپنے ملك ميں فتنوں سے محفوظ ركھنے كى استطاعت نہيں ركھتا تو اس كے ليے وہاں سے ايسے ملك كى طرف ہجرت - اگر ہجرت كرنے كى طاقت ہو تو - كرنى مشروع ہے جہاں وہ اپنے دين اور نفس كو محفوظ ركھ سكے.

اللہ تعالى ہى توفيق بخشنے والا ہے، اور ہمارے نبى محمد صلى اللہ عليہ وسلم اور ان كى آل اور ان كے صحابہ كرام پر اپنى رحمتوں كا نزول فرمائے.

واللہ اعلم .

ماخذ: ديكھيں: فتاوى اللجنۃ الدائمۃ للبحوث العلميۃ والافتاء ( 12 / 51 )

تاثرات بھیجیں