منگل 17 جمادی اولی 1440 - 22 جنوری 2019
اردو

اللہ تعالی کے ناموں کا عربی کے علاوہ ترجمہ کرنا۔

9347

تاریخ اشاعت : 29-04-2003

مشاہدات : 3473

سوال

کیا اللہ تعالی کے ناموں کا عربی کے علاوہ دوسری زبانوں میں ترجمہ کرنا تحریف ہے ؟

جواب کا متن

الحمد للہ :

اللہ تعالی کے ناموں کا دوسری زبانوں میں ترجمہ کرنا جائز ہے تاکہ جو عربی نہیں جانتا وہ سمجھ سکے لیکن اگر مترجم اگر دونوں زبانوں پر عبور رکھتا ہو ، جیسا کہ یہ بھی جائز ہےکہ آیات قرآنی اور احادیث نبویہ کا ترجمہ کیا جاۓ تاکہ انہيں دین کی سمجھ آسکے ۔

اور اللہ تعالی ہی توفیق بخشنے والا ہے ۔

اللہ تعالی ہمارے نبی محمد صلی اللہ علیہ وسلم اوران کی آل اور صحابہ پر رحمتیں نازل فرماۓ ، آمین ۔

ماخذ: فتاوی اللجنۃ الدائمۃ ( 3/ 122 )

تاثرات بھیجیں